Swat-Pakistan

سوات میں پاک فوج نے 12سال بعد اختیارات سول انتظامیہ کے حوالے کردیے

سوات: پاک فوج نے سوات میں 12 سال بعد اختیارات سول انتظامیہ کےحوالے کردیے، وزیراعلیٰ کے پی محمود خان کا کہنا ہے کہ عوام کے چہروں پر مسکراہٹ لانے پر پاک فوج کے مشکور ہے۔

تفصیلات کے مطابق سوات میں کانجو ایئرپورٹ پر پاک فوج کی جانب سے اختیارات حوالے کرنے کی تقریب کا انعقاد کیا گیا، تقریب میں وزیراعلیٰ کے پی محمود خان،کور کمانڈرپشاور نے شرکت کی، کمشنر مالاکنڈ اور ڈی آئی جی سعید خان وزیر بھی شریک ہوئے۔

جنرل آپریشنل کمانڈر میجرجنرل خالد سعید کی جانب سے بریفنگ دی گئی اور پاک فوج نے 12 سال بعد اختیارات باضابطہ سول انتظامیہ کے حوالے کردیے۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کورکمانڈرپشاورنذیربٹ نے کہا پاک فوج نے دہشت گردوں کا صفایا کیا، امن عوام اور فورسزکی قربانیوں کا نتیجہ ہے، عوام نے بہادری سے دہشت گردوں کا مقابلہ کیا۔

کور کمانڈرپشاور کا کہنا تھا کہ آج کا سوات ایک مختلف سوات ہے، امن لوٹ چکا ہے ،تجارت اور ترقی کا آغاز ہوچکا ہے ، آج سوات کی بنیادی ذمے داری انتظامیہ کے حوالے کردی، 80 فیصد چیک پوسٹوں کو ختم کردیا۔

انھوں نے مزید کہا تمام سیکیورٹی ذمے داریاں بھی انتظامیہ کےحوالے کریں گے، سوات میں حقیقی معنوں میں ایک کامیاب آپریشن کیا، یقین دلاتاہوں سوات سے دہشت گردی کا خاتمہ کیا گیا۔

نذیر بٹ کا کہنا تھا کہ خطرات سے نمٹنے کے لیے عوام کے تعاون کی ضرورت ہے، افغان سرحد پر 415 کلو میٹرکی فینسنگ مکمل ہوچکی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں