Sindh-Food-Authority

سندھ فوڈ اتھارٹی کی سنگین غفلت منظرِ عام پر آ گئی

کراچی: محکمۂ فوڈ سندھ کی سنگین غفلت منظرِ عام پر آ گئی، 7 ماہ گزر گئے لیکن سندھ فوڈ اتھارٹی مکمل فعال نہ ہو سکی۔

تفصیلات کے مطابق محکمۂ فوڈ سندھ کی سنگین غفلت کے باعث سات ماہ کے عرصے میں بھی سندھ فوڈ اتھارٹی کو مکمل طور پر فعال نہیں کیا جا سکا۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ سندھ فوڈ اتھارٹی میں اب تک فوڈ انسپکٹرز کی بھرتیاں نہیں ہو سکی ہیں، ہوٹلز اور فوڈ آؤٹ لِٹس پر چھاپوں کے لیے طلبہ کی خدمات لی جاتی ہیں۔
ٹھگز آف ہندوستان نےکامیابی سے سفر کاآغاز کردیا
ذرائع کے مطابق ڈیلی ویجز کی بنیاد پر جامعات کے طلبہ سے فوڈ سیفٹی آفیسرز کا کام لیا جاتا ہے، بجٹ مختص کیے جانے کے با وجود اتھارٹی اپنی لیب بھی نہیں بنا سکی ہے۔

ذرائع نے مزید بتایا کہ مختلف ریسٹورنٹس اور ہوٹلوں سے لیے گئے کھانوں کے نمونوں کو نجی لیبارٹریز سے چیک کرایا جاتا ہے۔
کرینہ کپور کی دیوالی پارٹی میں بے عزتی
سندھ فوڈ اتھارٹی ایکٹ کے تحت ریسٹورنٹس کا لائسنس یافتہ ہونا بھی ضروری ہے، تاہم شہر میں غیر معیاری ریسٹورینٹس کی بھرمار ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں