PIA Plane Sell in Germany With Low Price

جعلی بلوں کے ذریعے قومی ائیر لائن میں بٹی کرپشن کاانکشاف

کراچی: قومی ایئرلائن میں بڑے پیمانے پر بلوں میں بے ضابطگی اور گھپلوں کا انکشاف ہوا ہے‘ مبینہ جعلی بلوں کے ذریعے لاکھوں روپے کی خرد برد کرکے پی آئی اے کے خزانے کو نقصان پہنچایا گیا۔
ذرائع کے مطابق مختلف مد میں جعلی بل تیار کئے گئے ا ور ان کے ذریعے لاکھوں روپے خزانے سے وصول کئے گئے۔ اس مقصد کے لیے پی آئی اے کے دو افسران نے خلافِ ضابطہ اختیارات کا غیر قانونی استعمال کیا گیا۔

پی آئی اے کے ان جعلی بلوں کی کاپی اے آروائی نیوز نے حاصل کرلی۔منیجر کو آرڈنیشن مشیر ہوا بازی نے جعلی بل پی آئی اے سے دباو ڈال کر منظور کرائے اور سی ای او کے منیجر کوآرڈنیشن نے لاکھوں روپے بلوں کی منظوری دی۔جعلی بلوں میں مہنگی اشیاء کی خریداری مختلف نجی فرم اور ہوٹلز کے بل شامل ہیں۔

واضح رہے کہ سی ای او کے منیجر کوآرڈنیشن کے خلاف مبینہ جعلسازی کے حوالے سے پہلے ہی تحقیقات جاری ہیں۔ سی ای او کے منیجر کوآرڈنیشن نے جعلسازی کے ذریعے پی آئی اے میں بھرتی اور ترقی حاصل کی تھی۔ذرائع کے مطابق لاکھوں روپے بلوں کی بھی چیئرمین کی منظوری کے بغیر اختیارات کا ناجائز فائدہ اٹھاتے ہوئے بل کی ادائیگی کی منظوری دی۔م

شیر ہوا بازی کے منیجر کوآرڈنیشن نے پی آئی اے کے افسران پردباو ٔڈال کر بلوں کی فوری ادائیگی کے لیے کہا۔ذرائع کے مطابق پی آئی اے کے محکمہ فنانس نے بلوں کو ادا کرنے سے انکار کردیا تھا اور اس کی منظوری چیئرمین سے مشروط کردی تھی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں