Infromation Minister fawad chudary vs zardari

فواد چوہدری کا زرداری کو سیاستدانوں کی بجائے وکلاء سے ملاقاتوں کا مشورہ

وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کے شریک چیئرمین اور سابق صدر آصف علی زرداری کو سیاستدانوں کی بجائے وکلاء سے ملاقاتوں کا ‘مفت مشورہ’ دے دیا۔

ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ ‘زرداری صاحب سیاستدانوں کی بجائے وکلاء سے ملاقاتوں کو ترجیح دیں’۔

فواد چوہدری نے مزید کہا کہ ‘اس مفت مشورے کا احساس ان کو ہفتوں میں نہیں بلکہ دنوں میں ہوگا’۔
زرداری صاحب سیاستدانوں کی بجائے وکلاء سے ملاقاتوں کو ترجیح دیں، اس مفت مشورے کا احساس ان کو ہفتوں میں نہیں دنوں میں ہوگا۔ قراردادوں سے حکومتیں نہیں جاتیں اس کیلئے ووٹ چاہئیں زرداری صاحب کے پاس اب صرف نوٹ رہ گئے ہیں ووٹ وہ نوٹ کمانے کے چکر میں کھو چکے ہیں۔

Hamid Mir

@HamidMirPAK
کیا آصف زرداری کی طرف سے حکومت کے خلاف اسمبلی میں قرارداد لانے کی بات قبل از وقت ہے یا ٹھیک ہے؟#capitaltalk

10:16 AM – Oct 23, 2018
1,903
801 people are talking about this
Twitter Ads info and privacy

وزیر اطلاعات نے اپنے پیغام میں کہا کہ ‘قراردادوں سے حکومتیں نہیں جاتیں، اس کے لیے ووٹ چاہئیں۔ زرداری صاحب کے پاس اب صرف نوٹ رہ گئے ہیں اور ووٹ وہ نوٹ کمانے کے چکر میں کھو چکے ہیں’۔

فواد چوہدری نے یہ بیان ایک ایسے وقت میں دیا ہے جب دو روز قبل سابق صدر آصف علی زرداری نے سابق وزیراعظم نواز شریف سے مفاہمت کا اشارہ دیتے ہوئے کہا تھا کہ عمران خان پرائم منسٹر سلیکٹ ہیں، نہ یہ حکومت چل سکتی ہے اور نہ ہی ملک چلا سکتی ہے، لہٰذا تمام سیاسی جماعتیں حکومت کے خلاف قرارداد لائیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں