:DHQ ہسپتال ساھیوال کو ینگ ڈاکٹرز نے ذاتی جاگیر بنا لیا

ساھیوال:DHQ ہسپتال ساھیوال کو ینگ ڈاکٹرز نے ذاتی جاگیر بنا لیا۔سینئرز کو مرنا پیٹنا معمول بنا لیا.پنجاب حکومت سینئر ھیلتھ آفیسرز کو مار کھاتا دیکھ خاموش تماشائی ۔

اوف ڈیوٹی ینگ ڈاکٹر کی اون ڈیوٹی فی میل ہاؤس آفیسر کے ساتھ رات گئے رنگ رلیاں۔مختلف میڈیکل یونٹس رات گئے پریم ہاؤس بن جاتے ھے۔

ذرائع کے مطابق نائٹ ڈیوٹی اےایم ایس (ڈاکٹر احتشام) نے رنگے ہاتھوں پریمی جوڑے کو ناشائستہ حالت میں پکڑ لیا۔ اے ایم ایس کا اچانک راونڈ پریمی جوڑے کو نا گوار گزرا۔

آپ کون ھے اور یہاں کیا کر رھے ھے۔ینگ (ڈاکٹر نعمان) کا ڈیوٹی (اے ایم ایس) سے تلخ مکالمہ۔

اے ایم ایس (ڈاکٹر احتشام) نے کہا میں میں اون ڈیوٹی (اے ایم ایس۔DHQ) ھو اور راونڈ لگانا میرا کام ھے۔ آپ ڈیوٹی (اے ایم ایس) سے اس طرح بات نہیں کر سکتے۔

تمھاری جرات کیسے ھوئی میری دوست کو کچھ کہنے کی۔
آپ ینگ ڈاکٹرز کی پاورز کو بھول گئے ھے؟؟ اگر میں چاھو تو صبح ہی ینگ ڈاکٹرز کی ہڑتال کروا دو تو آپ کو ھمارے کام میں داخل اندازی کا رزلٹ مل جائے گا اور آپ معافی بھی مانگے گے۔ینگ ڈاکٹر نعمان

میرا آپ کے ساتھ کوئی پرسنل ایشو نہیں لیکن (ڈاکٹر نعمان) آپ آؤٹ اف ڈیوٹی یہاں میڈیکل یونٹ (2) میں کیا کر رھے ھے۔
(اے ایم ایس ۔ ڈاکٹر احتشام کا مکالمہ)

تلخیاں بڑی تو (ینگ ڈاکٹر نعمان) نے ڈیوٹی (اے ایم ایس) کا موبائل چھین کر دیوار پر دے مارا۔
پریمی جوڑے نے ڈیوٹی (اے ایم ایس) کو مارتے ھوے دھکے دے کر کمرے میں بند کر دیا۔
ھمارے صرف 15 دن باقی ھے تم ھمارہ کچھ نہیں بگاڑ سکتے۔ینگ ڈاکٹر نعمان

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں