وزیر اعلی سندھ کی وفاق کو دھمکی

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے سندھ اسمبلی کے اجلاس میں کہا کہ سندھ کو گیس نہ ملی تو سب کی گیس کی بند کردیں گے، سوئی سدرن کے دفاتر کراچی ہی میں ہیں ، انتظام خود


وزیراعلیٰ سندھ نےوفاق اور سوئی سدرن کو وارننگ دیتے ہوئے کہا کہ ہمارا صوبہ 70ستر فیصد گیس پیدا کرتا ہے، لیکن شہر میں گیس کی صورتحال سب کے سامنے ہے ۔گزشتہ چار ماہ سے سوئی سدرن ہمیں گیس فراہم نہیں کررہی ۔

انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت کو متنبہ کررہا ہوں کے اس ہفتے کے آخر تک گیس کی صورتحال بہتر نہ کی تو گیس لائن بند کردیں گے۔
ایم کیو ایم اراکین نے بھی وزیراعلیٰ سندھ کے مطالبے کی حمایت کردی ۔

وزیر اعلیٰ نے کہا کہ نوری آباد میں 100 میگاواٹ کا بجلی گھر تیارہےجس کی ٹیسٹنگ کے لیےسوئی سدرن کمپنی گیس نہیں دے رہی ،4مہینوں سے بجلی گھر کو گیس فراہمی کیلئے ٹال مٹول کی جا رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ بجلی گھر سے ٹرانسمیشن لائن کے الیکٹرک سے منسلک بھی کردی ہے ،سو میگاواٹ بجلی کے الیکٹرک کو دینی ہے اور اپریل سے اسے آن لائن کرنا تھا ،کے الیکٹرک بجلی مانگ رہا ہے ہم دے نہیں پا رہے۔

مراد علی شاہ نے کہا کہ سندھ 70فیصد گیس پیدا کرتاہے اورگیس ہمیں نہیں مل رہی، وزیر اعلی سوئی سدرن نےآج ہماری بات نہ مانی توحکومت اورپوزیشن ارکان سےتعاون مانگوں گا ،کل میں نےسوئی سدرن کےایم ڈی سےکہاتھاآج 11بجےتک انتظار کریں گے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں