نہال ہاشمی کی چئیرمین سینٹ سے استعفی منظور نہ کرنے کی درخواست

مسلم لیگ (ن) کے سینیٹر نہال ہاشمی نے چیئرمین سینیٹ رضا ربانی سے ملاقات کی ہے ، جس میں انہوں نے چیئرمین سینیٹ سے استعفیٰ منظور نہ کرنے کی درخواست کی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ چیئرمین سینیٹ کی ن لیگ کے سینیٹرز اور وزیر قانون سےبھی ملاقات ہوئی ہے، ملاقات میں نہال ہاشمی کے استعفے کی واپسی سے متعلق مشاورت کی گئی۔
مسلم لیگ ن کے رہنما مشاہداللہ خان نے سینیٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ پوری پارلیمانی پارٹی نہال ہاشمی کی چیئرمین سینیٹ سے استعفیٰ قبول نہ کرنے کی درخواست کو اچھی نظر سے نہیں دیکھ رہی، انہیں پارٹی ڈسپلن کا مظاہرہ کرنا چاہیئے تاہم اس حوالے سے وزیراعظم نواز شریف کا جو فیصلہ ہوگا پوری جماعت اس کے ساتھ کھڑی ہوگی۔
وزیراعظم کےمعاون خصوصی آصف کرمانی کا کہنا ہے کہ نہال ہاشمی نے پارٹی ڈسپلن اور پالیسی کی خلاف ورزی کی،لگتا ہےہماری کسی مخالف سیاسی جماعت نےنہال ہاشمی کوگودلےلیاہے، نہال ہاشمی نے ایک سیٹ کی خاطر اپنی سیاست ختم کر لی ہے۔
ان کا کہنا تھا کہ نہال ہاشمی نےیہ قدم اٹھاکر ہلکے پن کا ثبوت دیا، انہیں استعفے پر قائم رہنا چاہئے تھا،نہال ہاشمی نے اپنی عاقبت خراب کرلی ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں