قومی اسمبلی اور سینیٹ کے اجلاس ہنگامہ آرائی کا شکار،اپوزیشن جماعتوں کا وزیر آعظم سے استعفی کا مطالبہ

پاناما کیس کا فیصلہ آنے کے بعد اپوزیشن متحرک ہوگئی اور وزیراعظم سےمستعفی ہونےکامطالبہ کردیا۔

پارلیمنٹ میں اپوزیشن کی پارلیمانی جماعتوں کااجلاس خورشید شاہ اوراعتزازاحسن کی سربراہی میں ہوا، سینیٹ اورقومی اسمبلی میں اپوزیشن جماعتوں نے وزیراعظم سےمستعفی ہونےکامطالبہ کردیا۔
اپوزیشن نے سینیٹ اورقومی اسمبلی اجلاسوں میں بھرپوراحتجاج کیا ہے۔

قائد حزب اختلاف خورشید شاہ کا کہنا ہے کہ تمام جماعتوں کا موقف بہت واضح ہے، حکومت کو اپوزیشن کی طرف سے مشترکہ پیغام جانا چاہیے، ہمیں احتجاج کرنا چاہیے۔ نواز شریف استعفا دے کر پارلیمنٹ کو بچائیں۔

خورشید شاہ کا کہنا ہے کہ ہم سسٹم گرانا نہیں چاہتے لیکن وزیر اعظم کو گھر جانا پڑے گا، ہم جے آئی ٹی تسلیم کرنے کو تیار نہیں ،مسترد کرتے ہیں، سپریم کورٹ نے ان اداروں کو تہس نہس کیاہے، حکومت کے ماتحت افسران کیا تحقیقات کرینگے.
سینٹ میں اپوزیشن جماعتوں کا ڈیسک بجا بجا کر نواز شریف سے استعفی دینے کا مطالبہ طمام آپوزیشن آراکین نے بازوں پر کالی پٹیاں باندھ رکھی تھیں.
دوسری جانب قومی اسمبلی میں عمران خان کو بولنے کی اجازت نہ دینے پر آپوزیشن جماعتوں نے واک آوٹ کیا.قومی اسمبلی گو نواز گو کے نعروں سے گونجت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں