فرانس میں سب سے کم عمر ترین صدر کا انتخاب

پیرس: فرانس میں صدارتی انتخابات کے دوسرے مرحلے کی ووٹنگ مکمل ہوگئی. نتائج کے مطابق اعتدال پسند پارٹی کے سربراہ ایمونیئل میکخواں واضح اکثریت سے ملک کے صدر منتخب ہوگئے۔
غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق فرانس میں صدارتی انتخاب کے لئے قوم پرست خاتون سیاست دان مارین لی پین اور اعتدال پسند پارٹی کے سربراہ ایمونئیل میکخواں کے درمیان سخت مقابلے کی توقع تھی تاہم دوسرے مرحلے کی پولنگ میں ووٹرز کی بھاری تعداد نے میکرون کے حق میں ووٹ دیا۔ غیرسرکاری نتائج کے مطابق ووٹنگ ٹرن آؤٹ 65.3 فیصد رہا جو گزشتہ انتخاب کے مقابلے میں کم ہے اور 25 فیصد ووٹرز غیر حاضر رہے۔
غیرسرکاری اور غیر حتمی نتائج کے مطابق ایمونئیل میکخواں 66 فیصد ووٹ لینے میں کامیاب ہوئے جب کہ مخالف خاتون امیدوار مارین لی پین صرف 34 فیصد ووٹ حاصل کرسکیں۔ مقامی میڈیا میں میکخواں کی کامیابی کی خبریں آنے کے بعد ان کے حامی سڑکوں پر آگئے اور خوب آتشبازی کی۔ دوسری جانب مارین لی پین نے صدارتی انتخاب میں شکست قبول کرتے ہوئے میکخواں کو انتخاب جیتنے پر مبارکباد دی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں