سندھ کا دس کھرب 43 ارب کا بجٹ پیش

سندھ کا مالی سال 2017,18 کا 10کھرب 43 ارب روپے سے زائد کا بجٹ پیش کر دیا گیا،وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ سندھ اسمبلی میں بجٹ پیش کیا۔

بجٹ پیش کرتے وقت اپنی تقریر میں مراد علی شاہ نے کہا صوبے میں بجلی نہ ہونے سے عذاب آیا ہوا ہے، سندھ کے ساتھ زیادتی کی گئی، وفاقی حکومت اپنے وعدے پورے نہیں کررہی، ہم تو دعا ہی کرسکتے ہیں، وفاقی حکومت صوبے کے 108 ارب روپے فراہم کردے۔

سرکاری ملازمین کی تنخواہوں اور رٹائرڈ ملازمین کی پنشن میں 10 فیصد اضافے کا اعلان کیا گیا ہے جبکہ بجٹ میں 49 ہزار سے زائد خالی آسامیاں پر کرنے کا بھی اعلان کیا۔

سندھ کے نئے بجٹ برائے2017 اور 2018 میں نئی آسامیوں کے مقصد کےلئے بجٹ میں 20 ارب روپے مختص کیے گئے ہیں، ایک سو بیس گز کے مکانوں پر پراپرٹی ٹیکس اور سنیماؤں پر انٹرٹینمنٹ ٹیکس بھی لگایا گیا ہے۔ صوبے میں امن و امان کے لیے 92 ارب 91 کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں