جہانگیر ترین بھی حمام میں ننگے.

کھانانی اینڈ کالیاں منی اکسچینج سے تازہ ترین تحقیقات میں یہ بات سامنے آئی ہے .
کہ پاکستان میں حوالہ ہنڈی کے زریعےپیسہ باہر بھجوانے میں مختلف کمپنیاں اور جہانگر ترین کی بیٹی سمیت 21 افراد شامل ہیں

کھانانی اینڈ کالیاں گروپ کے ڈاریکٹرالطاف کھانانی کی امریکہ میں گرفتاری کے بعد وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے ایف آئی اے کو دوبارہ تحقیقات کا حکم دیاتھا .
تازہ ترین تحقیقات میں حوالہ ہنڈی کے زریعے تقریبا 356.2 میلین بیرون ملک بھجوائیں گئے.
یہ پیسہ باہر بھجوانے والوں میں سارا عباس،عمران احمد،اطرت احمد،شہزاد،راحیلہ رحمت اللہ، اختر علی عباسی ،احمد سید عرفان،عامر کوئٹی والا،امجد علی،ڈاکٹر الطاف، غفار پراچہ،ہارون چندہ،راشد علی ملک،نعیم منشی،ڈاکٹر ہارون صدیقی،ایم قاسم،مبارک علی ،محمد طارق اور جہانگیر ترین کی بیٹی مریم ترین شامل ہیں اس کے علاوہ مختلف کمپنیاں جن میں ڈان بریڈ،مرتضی ٹریڈرز دانیہ انٹر پرائزر کراچی سمیت آئی ٹی کی بڑی کمپنی چینل ٹیک بھی شامل ہے.
واضح رہے کہ الطاف کھانانی کو انسداد منشیات کی ٹیم نے ایک خفیہ آپریشن کے نتیجہ میں ستمبر 2016 کو گرفتار کیا تھا .اور منی لانڈرنگ کے جرم میں الطاف کھانانی کو امریکن عدالت سے 68 مہینے کی قید اور250000 ڈالر جرمانے کی سزا دی گئی تھی.
ایف آئی کے ایک افسر کے مطابق مزید تحقیقات کی جا رہی ہیں.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں