تنقید کرنے والے اپنے دور میں عدالتوں کو کنگرو کورٹ کہتے تھے. آصف کرمانی

اسلام آباد: مسلم لیگ (ن) کے ترجمان آصف کرمانی کا کہنا ہے کہ یہ ڈوگر کورٹ کا زمانہ نہیں ہمیں ججز پر اعتماد ہے نواز شریف اور ان کا خاندان سرخرو ہوگا جب کہ اپوزیشن میں بیٹھے افراد کو منہ چھپانے کی جگہ نہیں ملے گی۔
جوڈیشل اکیڈمی کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے آصف کرمانی کا کہنا تھا کہ بتانا چاہتا ہوں عدالتوں کا احترام کس نے کیا اور کون اس سے منحرف ہوا، تنقید کرنےوالے تو اپنے زمانے میں عدالتوں کو کینگروکورٹس کہتے تھے لیکن ہم نے پہلے بھی عدالتوں کا احترام کیا آج بھی کرتے ہیں اور کرتے رہیں گے ہم پر تنقید کرنے والے پہلے اپنے گریبان میں جھانکیں اور پہلے بے نظیر بھٹو کے قاتلوں کا بتائیں کیوں کہ انہیں پتہ ہے کہ قاتل کون ہے.
ان کا کہنا تھا کہ نوازشریف نے ایک نکاتی ایجنڈے کےتحت عدلیہ کی بحالی کے لیے لانگ مارچ کیا، ان کی قیادت میں لاکھوں لوگوں کا سمندر لاہور سے چلا اور جب گوجرانوالہ پہنچے تو پتا چلا عدلیہ کو بحال کیا جا رہا ہے، ہم چاہتے تو لاکھوں لوگ اسلام آباد کا رخ کرلیتے لیکن ہم ججوں کی بحالی پر پر امن طور پر واپس چلے گئے۔
ترجمان (ن) لیگ نے کہا کہ عمران خان تو 3 سال کا حساب نہ دے سکے لیکن ہم تو 70سال کا حساب دے رہے ہیں، نواز شریف پاکستان کو معاشی طاقت بنانے اور اس کی بقا کی جنگ لڑ رہے ہیں وہ منتخب وزیراعظم ہیں اور ان کا نام پاناما کیس میں نہیں لیکن پھر بھی اپنی تین نسلوں کو احتساب کے لئے پیش کردیا گزشتہ روز حسن نواز بھی جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہوئے اور آج حسین نواز جے آئی ٹی کے بلانے پر چوتھی بار پیش ہوئے اور ان سے آج تک جو سوالات پوچھے گئے انہوں نے مفصل جوابات دیے ، ہم چاہتے ہیں ایک دفعہ دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہو اور ہمارا مطالبہ صرف یہ ہے کہ ہم سے انصاف ہوناچاہیے۔ اگر محسوس ہوا کہ ہم سے ہٹ کر برتاؤ کیا جا رہا ہے تو اعلیٰ عدالتوں کا دروازہ کھٹکھٹائیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں