بھارتی صنعتکار سجن جندال کا مری جانا ویزا پابندیوں کی خلاف ورزی ہے.

بھارتی صنعتکار سجن جندال کی وزیراعظم نوازشریف سے مری میں ملاقات ویزا میں درج شرائط کی کے خلاف ہے.

زرائع کے مطابق جندال نواز شریف فیملی کے دوست ہیں جندال بدھ کے روز پاکستان پہنچے تھے اور سیدھے مری چلے گئے تھے جندال کو پاکستانی ہائی کمیشن سے جاری کردہ ویزا میں واضح نہیں ہےکہ وہ مری جا سکتے ہیں یا نہیں.
پاکستان اوربھارت ایک دوسرے کے شہریوں کوصرف ان مقامات پر جانے کی اجازت دیتے ہیں جو ویزا دیتے وقت لکھ دیے جاتے ہیں جبکہ سجن جندال کو ویزا 25 اپریل کوجاری کیاگیا اوراس کا ویزہ نمبر 769903 تھا اور انھیں صرف لاہور اوراسلام آباد جانے کی اجازت تھی۔ ان کا مری جانا ویزا پابندیوں کی خلاف ورزی ہے۔
علاوہ ازیں معلوم ہوا ہے کہ سجن جندال کے ساتھ سوکت سنگال اورسنگھ وریندرببرنامی دودیگرافراد بھی تھے لیکن ان دونوں کے کردارکے بارے میں ابھی واضح طور پرمعلوم نہیں ہوسکا۔ اگر سجن جندال بھارتی حکومت کا کوئی پیغام لے کرآئے تھے تو ہوسکتا ہے کہ دیگردونوں ساتھی بھارت کے سرکاری اہلکارہوسکتے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں